electric car points

برطانیہ کی نئی عمارتوں میں الیکٹرک گاڑیوں کے چارجنگ پوائنٹس لازمی



برطانیہ میں نئے قانون کے تحت الیکٹرک گاڑیوں کو چارج کرنے کی غرض سے عمارتوں میں چارجنگ پوائنٹس بنائیں جائیں گے۔
خبر رساں ادارے روئٹرز کے مطابق برطانوی وزیراعظم کے دفتر کی جانب سے جاری بیان میں کہا گیا ہے کہ بورس جانسن نئے قانون کا اعلان کریں گے جس کے تحت اگلے سال سے نئی عمارتوں میں چارجنگ پوائنٹس لگائے جائیں گے۔
بیان کے مطابق قانون کے تحت سال 2030 تک برطانیہ میں ہر سال 145 ہزار اضافی چارج پوائنٹس لگائے جائیں گے، تب تک پٹرول اور ڈیزل سے چلنے والی نئی گاڑیوں کی فروخت بھی بند ہو جائے گی۔
الیکٹرک گاڑیوں کو چارج کرنے کی غرض سے نئے گھروں اور غیر رہائشی عمارتوں جیسے دفاتر اور سپر مارکیٹس میں چارجنگ پوائنٹس نصب کیے جائیں گے۔ یہ قانون ان عمارتوں پر بھی نافذ ہوگا جنہیں مرمت کیا جا رہا ہے تاکہ دس سے زیادہ پاکنگ ایریاز بنائے جا سکیں۔
گزشتہ ماہ برطانوی حکومت کی جانب سے شائع ہونے والی ’نیٹ زیرو سٹریٹیجی‘ پالیسی کا ایک نقطہ یہ بھی ہے کہ انفراسٹرکچر میں سرمایہ کاری کی جائے تاکہ الیکٹرک گاڑیوں کی طرف منتقلی کو آسان بنایا جائے۔

Facebook Comments
50% LikesVS
50% Dislikes